Woh Kon Hai Jo Tery Rukh Se Apna Naqab Hatata Hai

woh kon hai jo tery rukh se apna naqab hatata hai

woh kon hai jo tery rukh se apna naqab hatata hai

 

وہ کون ہے جو تیرے رخ سے اپنا نقاب ہٹاتا ہے
یہ متلاشی جو تیرے دل میں اپنے راز چھپاتا ہے
پھر وہی تمنا وہی کاوش تیرے در پر
تو بدل کر ٹھکانہ جو ہر بار مجھے بلاتا ہے
کیوں کر نا ناز کرے وہ اپنے غم پر
تو رشک اس اشک کاجو صبح شام تجھے روتا ہے
فراق کس کو قبول ہے عشق جیسی عبادت پر
دل جس کو مٹا کر بنا دے اسی سے جی لگاتا ہے

سیّدہ بتُول

Leave a Reply

Submit Your Poetry To Us : Submit Here